لوگوں کوزیادہ پیسہ ملنے والا ہے جو یہ تیس دانے تسبیح کے روز پڑھ لے حیران رہ جائے گا

kin logon ko zyada paisa milny wala hai

2021ءمیں میرے جتنے بھائی ، بہنیں ، دوست ہیں صر ف یہ تیس دانے تسبیح کے پڑھ لیا کرے ۔ تو وہ حیران رہ جائیں گے۔ کہ اتنی چھوٹی سی عمر میں اللہ پاک نے ان کو اتنی دولت سے نواز دیا ۔ آپ لوگوں نے اپنے ایک اردگرد، گلی محلوں ، رشتوداروں اور دوستوں میں دیکھا ہوگا۔ کہ 2020 ءمیں ان کے پاس بہت دولت آگئی ۔ ان کے پاس بہت پیسا آگیا۔ آپ کو ان کو دیکھ کر حیران رہ گئے۔ کہ ان کے پاس اتنی دولت کہاں سے آگئی ۔ کیونکہ جو رزق ہوتا ہے جو دولت ہوتی ہے ۔

وہ انسان کو اس کے نصیب سے ملتا ہے نہ تو کوئی کسی سے زبردستی چھین سکتا ہے۔اور نہ ہی یہ انسان کے اختیار میں ہے کہ وہ زیادہ سے زیادہ پیسا اکٹھا کرلے۔ تو آج اس طرح ہوتا تو ہر انسان امیر ہوتا ۔ کروڑوں اربوں روپے کا مالک ہوتا۔ اگر آپ کا 2020ء کا سال دولت کے حوالے سے ، پیسے کے حوالے سے اچھا نہیں گزرا۔ آپ کو بہت سے مسائل کا سامنا کرنا پڑا۔ آپ کے گھر کے اخراجات بڑی مشکل سے پورے ہوتے رہے۔ لیکن آپ کے اردگرد کے لوگ دولت مند ہوگئے۔

اور ان کے پاس پیسا آگیا۔ تو میں آپ لوگوں سے صرف اتنی سی گزارش کرنا چاہوں گا۔ اگر آپ چاہتے ہیں کہ 2021ء کا سال آپ کا مال ودولت کا سال ہو۔ اور آپ کو زیادہ سے زیادہ اس سال میں دولت ملے۔ تو ابھی یہ سال شروع ہوا ہے جو بیس دانے تسبیح کا عمل آپ کو بتانے جارہے ہیں۔ آپ نے لوگوں نے روزانہ کسی بھی وقت صرف یہ تیس دانے تسبیح کے پڑھ لیا کریں۔ یقین کریں کہ آپ خود حیران رہ جاؤ گے۔

کہ ابھی میری اتنی سی عمر ہوئی اور اللہ پاک نے کرم کردیا۔ اللہ کا فضل ہوگیا۔ اور اللہ پاک نے اتنی دولت سے نواز دیا۔ وہ عمل جو آپ کو بتانے جارہے ہیں۔ا س پر ضرور عمل کریں۔ اور روزانہ صرف تیس دانے اس کو آپ نے پڑھ لینا ہے۔ چھوٹا ساعمل ہے آسانی کے ساتھ آپ کو یا د ہوجائے گا۔ وہ عمل کونسا ہے ؟ جو آپ کو بتانے جارہے ہیں۔ وہ عمل “فَاللہ الحَمد ُ رَ بِ السَمَوٰتِ وَرَ بِ الاَ ر ضِ وَھُوَ العزیزُ الحَکیمُ”ان کلمات کو تیس دانے تسبیح کے اس عمل کو پڑھ لینا ہے یعنی ہر دانے پر اس طرح سے پڑھناہے۔

پہلے” بسم اللہ الر حمن الرحیم” اور اس کے بعد یہ کلمات پڑھنے ہیں۔پھر ہردانے پر بسم اللہ کے ساتھ شروع کرکے روزانہ صرف تیس دانے پڑھ لیں ۔ آپ کے پانچ سے چار منٹ لگیں گے ۔ یقین جانیں کہ اس سال آپ کے پا س پیسا کبھی بھی ختم نہیں ہوگا۔ اتنی دولت ملنا شروع ہوجائے گی۔ اتنا پیسا آنا شروع ہوجائے گا۔ کہ جن لوگوں کے بارے میں سوچتے تھے کہ اللہ پاک نے ان کو پچھلے سال اتنی دولت عطا کی وہ اس سال وہی لوگ آپ کو دیکھ کر حیرا ن رہ جائیں گے۔ کہ آپ کے پاس اتنا پیسا کہاں سے آگیا۔ کیونکہ پیسوں کی ضرورت سے کوئی بھی انکار نہیں کر سکتاہے۔ پیسا ہی وہ ذریعہ ہے جس سے ہم اپنی زندگی کی بنیادی ضرورتیں پوری کرتے ہیں۔ یہ پیسا ہی ہمیں روٹی، کپڑا اور مکان دیتا ہے۔ یہ سب کچھ پیسا ہی دیتاہے۔

Leave a Comment