دانتوں کی ہر قسم کی بیماری سے چھٹکارا مل جائے گا۔

Dantoon ki her kisam ki bimari sy chutkara mil jaey ga

اس تحریر میں دانتوں کی بیماری کے متعلق ایک وظیفہ شیئر کیاجارہا ہے ۔ اس سے پہلے یہ بات سمجھ لیجئے کہ دانت اللہ کی نعمتوں میں سے ایک بہت بڑی نعمت ہے سب سے پہلی بات یہ ہے کہ ہمیں ہر نعمت کی قدر کرنی چاہئے قدر سے کیا مراد ہم اس نعمت کی حفاظت کریں جس طرح آنکھیں ہیں دانت ہیں ، جسم کے باقی اعضا ہیں اب دانتوں کی حفاظت کیا ہے کہ دانت کھانا کھانے کے بعد بھی ہم ضرور صاف کریں رات کو سوتے وقت بھی صاف کریں اور پانچ وقت نماز پڑھتے ہوئے ہم مسواک ضرور استعمال کریں

باقی ٹوتھ پیسٹ وغیرہ جو ہم استعمال کرتے ہیں وہ بھی ٹھیک ہے لیکن مسواک کی بہت بڑی فضیلت ہے ۔ اس کی فضیلت کے بارے میں حضور ﷺ نے بہت ہی احادیث ارشاد فرمائیں اور صحابہ کو تاکید فرمائی۔ اگر ہم صحیح طریقے سے دانتوں کی صفائی کا خیال رکھیں گے تو اللہ رب العزت دانتوں کی ہر بیماری سے حفاظت فرمائیں گے دانتوں کی بیماریاں مختلف ہوتی ہیں دانتوں میں درد شروع ہوجاتا ہے دانت اور داڑھ کا درد یہ بہت ہی سخت ہوتا ہے شدید قسم کا ہوتا ہے

اللہ نا کرے جس کو یہ درد ہوا ہے اس کو وہی سمجھ سکتا ہے کہ اس کی کتنی تکلیف ہے اس کے علاوہ دانتوں میں سے خون بھی آنا شروع ہوجاتا ہے بعض دفعہ دانتوں میں سے پیپ بھی آتی ہے تو یہ سارا اسی بات کا نتیجہ ہوتا ہےکہ ہم اس نعمت کی قدر نہیں کرتے صفائی کا خیال نہیں کرتے کھانا کھانے کے بعد ہم نا کلی کرتے ہیں ویسے ہی اٹھ کر چلے جاتے ہیں کھانےکے ذرات دانتوں میں پھنس جاتے ہیں وہ پھر زہر بن جاتے ہیں بیماری بن جاتے ہیں کئی قسم کی بیماریاں اس سے پیداہوتی ہیں

صرف دانتوں کی ہی نہیں بلکہ معدے کی بیماریاں بھی اس سے پیدا ہوجاتی ہیں ایک دانتوں کی حفاظت نہ کرنےکی وجہ سے کتنی اور تکلیفیں شروع ہوجاتی ہیں اور کتنی اور بیماریاں پیدا ہوجاتی ہیں تو دانتوں کی صفائی بہت ضروری ہے بالفرض اگر کسی سے کوتاہی ہوگئی خامی ہوگئی یہ لغزش ہوگئی کہ صفائی نہیں کر سکا دانتوں کی اس بیماری کے اندر وہ مبتلا ہوگیا تو اس کے لئے یہ وظیفہ تحریر کیاجارہا ہے۔

اس آیت مبارکہ کو آپ نے ہر نماز کے بعد اکیس مرتبہ پڑھنا ہے کوئی اس پر وقت نہیں لگتا آگے پیچھے درود پاک پڑھنے کی اس میں ضرورت نہیں ہاں کوئی اپنی محبت سے شوق سے پڑھتا ہے
تو کوئی حرج نہیں ایک چیز کا جب حکم نہیں وہ مرضی ہے ایک دفعہ پڑھے جتنی دفعہ مرضی پڑھے نہ پڑھے تب بھی کوئی حرج نہیں وہ تو آپ ﷺ کے ساتھ جو محبت ہے وہ تو ہے ہی ہے اس کے بغیر تو ہم کسی کام کے نہیں ہیں اگر وہ محبت دل سے نکل گئی تو سب کچھ ہی ختم ہوگیا ایمان ہی ختم ہوگیا اس کے پڑھنے کا طریقہ اچھی طرح سمجھ لیجئے۔

آپ نے ہر نماز کے بعد اکیس مرتبہ پڑھنا ہے اس کا طریقہ یہ ہے کہ دونوں ہاتھ اپنے چہرے کے اوپر رخساروں کے اوپر رکھ لیجئے اور مسلسل اکیس دفعہ یہ آیت پڑھئے۔پڑھنے کے بعد پھر اللہ سے دعا بھی مانگئے ۔ہر وظیفے کے بعد دعا تو ویسے ہی مانگی جاتی ہے چھوٹے بچے ہیں وہ ظاہر ہیں نہیں پڑھ سکتے اگر چھوٹے کسی بچے کے دانتوں میں کوئی تکلیف ہے بچوں کے بھی ہوجاتی ہے تو ان رخساروں پر والدین ہاتھ رکھ کر پڑھیں اور دعاکریں انشاء اللہ بہت فائدہ ہو گا وہ آیت یہ ہے : سَلَامٌ قَوْلًا مِّن رَّبٍّ رَّحِيمٍ

Leave a Comment