رمضان کی چاند رات کا وظیفہ

Ramzan ki chand raat ka amal

آج میں آپ کے لیے ایک خاص وظیفہ لے کرحاضرہوئے ہیں۔ ماہ رمضان المبارک کی آمد آمدہے۔ فرائض رزوں کی ادائیگی کے ساتھ ایک خاص عمل کرنا ہے۔ اور یہ عمل ماہ رمضان کی چاند رات کو کرناہے۔ اور یہ عمل ایسا ہے کہ سال میں ایک ہی دفعہ یہ عمل کیا جاتا ہے اور اس عمل کی خاصیت یہ ہے اور اس عمل کی برکت یہ ہے کہ پورا سال انشاءاللہ عزوجل آپ کے رزق میں برکت رہے گی۔ اور برکت کیسی رہے گی؟ اللہ تعالیٰ آپ کے رزق میں کیسے برکت عطا فرمائے گا۔

جیسا کہ پانی اونچان سے نیچان کی طرف تیزی کے ساتھ آتا ہے۔ یعنی پہاڑ سے پانی کو بہایا جائے تو نیچے کی طرف کتنا تیزی کےساتھ آتا ہے۔ اس سے زیادہ تیزی کے ساتھ آپ کے رزق میں برکت آئے گی۔ اور پورا سال انشاءاللہ عزوجل پوری فراخی کے ساتھ آپ گزارنے میں کامیاب ہوجائیں گے۔ اور وظیفہ کیا ہے ؟ تو وظیفہ یہ ہے کہ جو کوئی رمضان المبار ک کی چاند رات کو مغر ب کی نما ز ادا کرنے کے بعد اکیس مرتبہ “سورت القدر” قرآن پاک تیسویں پارے میں سورت القدر ہے۔

یہ “سورت القدر” مکمل اکیس مرتبہ اول وآخر درود پاک کے ساتھ پڑھیں۔ اللہ کی رحمت سے انشاءاللہ عزوجل آپ کے رزق میں برکت رہے گی۔ آپ نے وظیفہ پڑھا ہے۔ تو جب رمضان المبارک کی چاند رات کو اس وظیفے پر عمل کرنے لگیں۔ تو چند احتیاط کو ضرور پیش نظر رکھیں۔ باوضو آپ نے اس وظیفہ پرعمل کرنا ہے۔ قبلہ کی طر ف منہ کرکے اس وظیفے پرعمل کیا جائے۔ قبلہ کی طر ف بیٹھ کر سورت القدر کی تلاوت کی جائے۔ اسی طرح جب آپ اس وظیفے کو پڑھنے لگیں تو زبانی بھی پڑھا جاسکتا ہے ۔

لیکن بہتر یہ ہے کہ قرآن پاک کھول کر ، قرآن پاک ہاتھ میں لے کر پھر آپ “سورت القدر ” کی تلاو ت کریں۔ تو قرآن پاک دیکھنے کا بھی ثواب ملے گا۔ اور قرآن پاک چھونے کا بھی ثواب ملے گا۔ ایک اور بات ذہن میں رکھ لیں۔کہ وظیفہ شروع کرنےسے پہلے صدقہ ضرور دے دیجیے گا۔ انشاءاللہ عزوجل اس کی بھی برکتیں حاصل ہوں گی۔

Leave a Comment