جو یہ پانی سات دن تک پئے گا اس کے ہر بیماری دور ہوجائے گی۔

Jo yeh paani sath din tak peeye ga uski her bemari door ho gii

بسم اللہ الرحمٰن الرحیم۔۔۔
السلام علیکم ،امیدہےآپ خیریت سے ہوں گےاورہماری دعابھی ہےکہ اللہ کریم،آپ کوسدا عافیت کے سائے میں رکھے۔ ناظرین کرام۔۔۔ آج سے کچھ زمانہ پہلے دیکھا جائے تو ڈاکٹروں کی تعداد بہت کم تھی اور آج ڈاکٹروں کی تعداد بہت زیادہ ہے اس کی ایک وجہ ہےکہ ہمارے کھانوں میں شیطانی چیزوں کا عمل دخل ہے۔اور ہمیں یہ شیطانی چیزوں کا عمل دخل نظر نہیں آتا ۔اور دوسرا جب ہر طرف فتنوں کا دور ہو۔

۔ گناہوں کی اور وباؤں کی کثرت ہو۔ گناہوں کی فضائیں عام ہو تو ایسے وقت میں آج کا یہ افضل پانی والا عمل شفا ہے۔۔۔دوا ہے ۔۔۔دعاہے ۔۔۔غذاہے ۔۔حفاظت ہے ۔۔کفایت ہے۔۔مدد ہے ۔۔راحت ہے ۔۔سکون ہے۔۔ چین ہے ۔۔۔ آج کے اس عمل کو اپنی زندگی کا حصہ بنائیں ۔۔ اس پانی کو اپنی زندگی میں روزمرہ کے معمولات میں شامل کریں ۔ اگر آپ بیمار ہیں تو آپ نے صرف دم کیا ہوا افضل پانی سات دن تک پینا ہے، انشا اللہ آپ کی ہر بیماری دور ہوجائے گی۔ہر تکلیف سے محفوظ ہوجائیں گے ۔

زندگی بھر کے لیے یہ پانی کافی ہے۔پڑھنا بھی ایک دفعہ ہے۔اور خصوصاًیہ آج کا وظیفہ لاعلاج امراض کے لئے نسخہ کیمیا بھی ھے ، بلکہ اس پانی والے عمل کے بہت زیادہ فضائل ہیں اگر آپ اس وظیفہ پر عمل کریں تو آپ کے گھر میں ہر قسم کی لڑائی جھگڑا، ہر قسم کا فتنا فسادکسی بھی قسم کی پریشانی کے لیے اگر آپ اس وظیفہ کو پڑھ کے پانی پر دم کر کے پی لیں گے تو اللہ پاک تمام طرح کی لڑائیاں ختم فرما دیں گےاور اس کے علاوہ اگر آپ کے گھر جادو ہے تو پانی پر دم کر کے آپ اس پانی کو گھر کے چاروں کونوں پر چھڑکیں تو آپ کے گھر میں موجود جادو کے اثرات انشا ء اللہ ختم ہو جائیں گے

اور دوستو، اگر آپ کی اولاد نا فرمان ہے تو پانی پر دم کر کے اپنی اولاد کو پلادیا کریں گے تو آپ کی اولاد آپ کی آنکھوں کی ٹھندک بن جائے گی ۔ اور اگر کسی بھی قسم کی کوئی بیماری ہے تو یہ خاص عمل ایک خاص طریقہ سے پڑھنے سے انشاء اللہ ہر قسم کی بیماری سے بھی اللہ پاک آپ کو نجات عطا فرمائیں گے ۔ناظرین کرام۔۔۔۔۔ایک اللہ والے فرماتے ہیں کہ تین پانی سب سے زیادہ افضل ہیں۔ ایک آب زم زم،دوسرا وضو کا پانیاور تیسرا بارش کا پانی۔

دوستو بارش ایک ایسی چیز ہے جس کے ہر قطرے کے ساتھ فرشتہ اترتا ہے۔ قدرت کی عظیم نشانیوں میں اہم نشانی آسمان سے بارش کا نزول جو انسانوں کے علاوہ روئے زمین پر بسنے والی دیگر مخلوق کی زندگی اور بقاء کا اہم حصہ ہے۔ بارش کے قطرے قطرے میں رب کریم نے ایسی شفاء عطاء ‘ عنایات اور برکات چھپا رکھی ہیں کہ ہم اپنی کم علمی کی وجہ سے اس عظیم نعمت کو ضائع کردیتے ہیں اور اکٹھا کرنے کے بجائے ندی نالوں میں بہا دیتے ہیں۔

میں بچپن سے دیکھ رہا ہوں کہ میرے اباجان چھت پر بارش کے دوران بڑے بڑے برتن رکھ دیتے ہیں اور اس پانی کو اکٹھا کرکے پھر کھانے‘ پینے میں استعمال کرتے اور ایک خاص عمل کروا کر لوگوں کو یہ پانی استعمال کرواتے ہیں۔ الحمدللہ! اس کے رزلٹ میں نے خود اپنے کانوں سے سنےہیں ، اس لیے میں چاہتا ہوں کہ مخلوق خدا اس فیض عام سے بھرپور مستفید ہو اور لوگ اسے اکٹھا کرکے سارا سال شفائی خزانہ سے بیماریاں دور اور تندرست‘ چاق وچوبند زندگی کا آغاز کریں۔بارش ہونا صرف پانی کا برسنا نہیں‘ یہ برکت کے خزانے ہیں، یہ عافیت کے خزانے ہیں، عطا کے خزانے ہیں، یہ رحمت کے خزانے ہیں۔

یہ فضل کرم کے خزانے ہیں ہم تو بھولے ہی رہ گئے اور ایسا بھولے ایسا بھولے کہ بھولنا ہی بھول گئے اور ہمیں تو پتہ ہی نہیں ہے ہم تو اس بارش کے پانی کو پرنالوں سے گرا کر نالوں میں پہنچا رہے ہیں۔امام شافعی نے حضرت انس بن مالکؒ سے روایت کی ہے۔ انس کا بیان ہے ’’ہم لوگ رسول اللہﷺ کے ساتھ تھے کہ ہم کو بارش پہنچی تو رسول اللہﷺ نے اپنا کپڑا اتار دیا اور فرمایا کہ اپنے رب کے قریبی وعدے کا انعام ہے۔

بلکہ نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم کا ارشاد ہے کہ جو شخص بارش کا پانی لے کر اس پر سورہ فاتحہ ستر بار، سورہ اخلاص ستر بار اور معوذتین ستر بار پڑھ کر دم کرے تو آپﷺ نے قسم کھا کر ارشاد فرمایاکہ میرے پاس جبرائیل علیہ السلام تشریف لائے اور مجھے خبر دی کہ جو شخص یہ پانی پیئے گا اللہ تعالی اس کے جسم سے ہر بیماری دور فرما دیں گے اور اسے صحت عطا فرمائیں گے اور اس کے گوشت پوست اور اس کی ہڈیوں سے تمام بیماریوں کو نکال دیں گے۔

بلکہ ایک بہن نے ہمیں ای میل کی کہ میں اکثر بیمار رہتی تھی مجھے اکثر وہم ستاتے تھے کہ میں کسی بڑی بیماری میں مبتلا ہوگئی ہوں‘ سینے میں درد رہتا تھا‘ میرے ہاںاولاد نہیں ایک بچہ پیدا ہوکر فوت ہوگیا تھا اس کے بعد حمل ضائع ہو جاتا تھا، جس کی وجہ سے بہت پریشان رہتی تھی ، گھر میں دل گھبراتا تھاڈرائونے خواب آتے تھے اکثر روتی رہتی تھی لیکن میں نے بارش کا دم کیا ہوا پانی سات دن تک پیاتو میری ہر بیماری دور اللہ کے حکم سے دور ہوگئی۔ دوستو دل کے مریض،فالج کے مریض سب کے لیے عجیب کمال کا عمل ہے۔

اسی طرح اس عمل کو پڑھ کربارش کے پانی پر دم کر کے اس پانی کو دوسرے پانی میں مکس کر دیں جس پانی میں سار ے گھر والے افراد پانی پیتے ہیں جیسے جیسے سارے گھر والے یہ پانی پیتے جائیں گے آ پ کے گھر کی ساری لڑائیاں جھگڑے یا فتنہ فساد بھی ختم ہو کرانشا اللہ گھر والے ایک دوسرے سے پیار محبت کرنے لگے گے۔ جیسے میں نے پہلے بتایاکہ ہمارے گھر تو پینے میں بارش کا پانی ہی استعمال ہوتا ہے جیسے ہی بارش کا ماحول دیکھتے ہیں پانی کے بڑے بڑے ٹب رکھ دیتے ہیں اور بوتلوں میں بھر کے ڈسپنسر پر رکھ دیتے ہیں

اور ضرورت کے مطابق پیتے ہیں تاکہ وہ فرشتے کی روحانیت معصومیت ہمارے اندر آجائے اس قدرتی اور آلودگی سے پاک پانی سے صحت بھی اچھی رہتی ہے۔ کیونکہ اللہ تعالیٰ خودفرمارہے کہ میں بارش کے پانی کے ذریعے طرح طرح کی کھتیاں نکالتا ہوں جس کی مختلف قسمیں ہیں۔ کھیتی میں ضروری نہیں کہ یہ والی کھتیاں، سبزہ یا فصلیں آئیں گی بلکہ اس کے اندر ایسے انسان جو دوسرے انسانوں کے لیے نفع بخش بن جائے۔

بارش کا پانی برسے اور ہم محروم رہ جائیں یہ آپ کی غفلت اور غلطی نہیں بلکہ یہ میری غفلت ہے میں نے آپ کو اس چیز سے آگاہ نہیں کیا اور آپ اتنی بڑی نعمت سےمحروم رہ گئے۔ بزرگ کہتے ہیں کہ اگر کوئی چیز آپ کررہے ہیں تو آپ وہی چیز دوسروں کو بتائیں گے تو اس چیز کی تاثیر بڑھ جاتی ہے اس لیے میں نے کہا کہ میں صرف اس سے فائدہ نہ اٹھائوں آپ بھی اس خیر کے کام میں شامل ہوں۔

بارش کے پانی کو صاف پانی میں اکٹھا کیجئے اور اسے پینے ‘ کھانا پکانے‘ آٹا گوندھنے میں استعمال کیجئے۔اور کوشش کریں کہ اپنے دین اور قرآن کو جانیں تو یقینا ہمارے لئے یہ عمل باعث نجات ہو گا۔ ہم چونکہ بھٹکے ہوئے ہیں، اس لئے ریسرچ نہیں کرتے۔ ورنہ ہم آج جن شدید مشکلات کا شکار ہیں اُس سے نکل سکتے ہیں اور اس سے نکلنے کا ایک ہی راستہ ہے کہ ہم نہایت اخلاص کے ساتھ قرآن پر ریسرچ کریں اور اس سے سیکھیں کہ اللہ تعالیٰ نے ہمارے لئے اس میں کیا کیا خزانے چھپائے ہیں یہ ہم پر عیاں ہو گئے، تو شاید ہماری دنیا و آخرت دونوں سنور جائیں۔

قرآن پاک کا ہر لفظ شفا ہے۔ بعض عملی تجربوں سے بھی ثابت ہو چکا ہے کہ کائنات میں کسی بھی فرد کو کسی قسم کا کوئی عارضہ لاحق ہو۔ کوئی ذہنی اُلجھن یا کوئی قلبی بے چینی ہو، کالا پیلا جادو ہو، یا جن آسیب کا سایہ، یہ بارش کا پانی ہر ایسی تکلیف، بدبختی اور نحوست کے لئے تیر بہدف ہے۔ بارش کے پانی کی برکت سے کینسر، ہیپاٹائٹس ، امراض قلب اور شدید نوعیت کی ذہنی الجھنوں میں مبتلا لوگوں کو نہ صرف مکمل شفا نصیب ہوئی،بلکہ ایسا ذہنی سکون ملا، جس کی انہیں برسوں سے تلاش تھی۔

گئے، جس سے اس خاص پانی کی افادیت اُجاگر ہوئی اور اس کے سننے سے ہزاروں لوگوں کو فائدہ پہنچا انہیں ذہنی و جسمانی بیماریوں سے نجات ملی۔ دوستو ایک اندازے کے مطابق اس پانی کی برکت سے اب تک ہزاروں افراد فیض یاب ہو چکے ہیں۔ آپ بھی ضرور تجربہ کریں اور اس پانی سے فائدہ اٹھائیں۔ہماری دعا ہے اللہ پاک آپ کو ایمان و صحت والی زندگی عطا فرمائے۔ آمین۔ ثم آمین۔

Leave a Comment