صبر اور برداشت ثابت قدمی کی قرآنی دعا۔۔یہ جادوگروں کی دعا ہے

Saber or berdasht Sabit qadmii

بسم اللہ الرحمن الرحیم، السلام علیکم۔ امید کرتے ہیں کہ آپ خیریت سے ہوں گے۔۔اور ہماری دعا بھی ہے کہ اللہ کریم آپ کو سدا عافیت کے سائے میں رکھے۔۔۔ناظرینِ اکرام۔۔۔۔یہ جادوگروں کی دعا ہے۔ جب انہوں نے دیکھا کہ اللہ پر ایمان لانے کی وجہ سے فرعون سزا دینے پر تلا ہوا ہے تو جادوگروںنے اللہ تعالیٰ سے دعا مانگی کہ اے ہمارے آقا و مولا ! اے ہمارے پروردگار ہمیں صبر و استقامت عطا فرما تاکہ ہم اس آزمائش میں ثابت قدم رہیں اور ہمارا خاتمہ ایمان واسلام پر ہو۔

غور کرنے کا مقام ہے کہ وہجادوگر جو کل تک بدترین کفر میں مبتلا تھے کہ فرعون جیسے بیہودہ انسان کو خدا مانتے تھے، اللہ تعالیٰ کی شان و عظمت سے بالکل ناآشنا تھے، ان میں یکبارگی موسیٰ علیہ السلام کا معجزہ دیکھ کر ایسا انقلاب آگیا کہ اب پچھلے سب عقائد و اعمال سے یکسر تائب ہو کر دین حق پر اتنے پختہ ہوگئے کہ اس کے لیے جان تک دینے کو تیار نظر آتے ہیں، اور اللہ سے یہ دعا کرتے ہیں۔۔جادوگروں کیاس دعا کے الفاظ قرآنِ پاک میں سورت ۔۔الاعراف۔۔کی آیت نمبر ۔۔۔126۔میں موجود ہیں ۔۔

آپ بھی ان الفاظ کو زبانی یاد کر لیجئے تاکہ۔۔۔دنیا وآخرت کے فائدے آپ بھی حاصل کرسکیں ۔۔۔رَبَّنَآ اَفْرِغْ عَلَيْنَا صَبْرًا وَّ تَوَفَّنَا مُسْلِمِيْنَ۔۔ یعنی اےہمارے رب ہم پر صبر اور استقامت کے دروازے کھول دے ہم مریں تو مسلمان ہی مریں ناظرینِ اکرام ۔۔۔۔آپ اس قرآنی دعا کو اپنی نماز میں بھی پڑھ سکتے ہیں۔۔ اور صبح شام کے وظائف میں بھی شامل کر سکتے ہیں۔ کیونکہاس دعا میں اشارہ اس معرفت کی طرف ہے کہ اگر اللہ تعالیٰ نہ چاہے تو انسان کا عزم وہمت کچھ کام نہیں آتا، اس لیے اسی سے ثابت قدمی کی دعا کی گئی۔

اور یہ دعا جیسے معرفت حق کا ثمرہ اور نتیجہ ہے اسی طرح اس مشکل کے حل کا بہترین ذریعہ بھی ہے جس میں یہ لوگ اس وقت مبتلا تھے، کیونکہ صبر اور ثابت قدمی ہی وہ چیز ہے جو انسان کو اپنے حریف کے مقابلہ میں کامیاب کرنے کا سب سے بڑا ذریعہ ہے۔اگر انسان ایمان سے خالی ہے تو اس سے زیادہ حقیر کوئی شے نہیں اور اگر وہ ایمان سے بہرہ مند ہے تو اس سے زیادہ بلند کوئی شے نہیں۔اسی لئے اللہ پاک ہمیں بھی اس قرآنی دعا کو پڑھنے والا بنائے اور ہمیں اس حال میں موت دے کہ ہم اسلام پر ہوں۔ ۔۔۔۔آمین

Leave a Comment